شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / چترال یونیورسٹی چترال کی پسماندگی اور غربت کا خاتمہ اور ترقی کی نئی دور کے آغاز کا سبب ہوگا۔عمران خان

چترال یونیورسٹی چترال کی پسماندگی اور غربت کا خاتمہ اور ترقی کی نئی دور کے آغاز کا سبب ہوگا۔عمران خان

چترال (نمائندہ سی۔اے) چترال یونیورسٹی کے قیام کے بارے میں انہوں نے وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کی تعریف کرتے ہوئے انہوں نے وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہاکہ انہوں نے چترال کے عوام کے ساتھ کیا ہوا وعدہ پوراکردیا ہے اور یہ مسلمان کا شیوہ اور حکم خداوندی ہے کہ وہ وعدہ نبھانے میں کوئی کمزوری نہ کرے۔ انہوں نے کہاکہ چترال یونیورسٹی سے یہاں ترقی کا سفر شروع ہوجائے گا اور یہاں کی مستقبل کا انحصار بھی اعلیٰ تعلیم پر ہے کیونکہ چترال میں کاشت کاری کے لئے زرعی زمین بھی نہایت محدود ہے لیکن قدرت نے اس علاقے کو ٹورزم کی زبردست پوٹنشل سے نوازا ہے اور یہاں انواع واقسام کی قدرتی وسائل ہیں جن میں جنگلات اور جنگلی حیات پر مشتمل گرین ٹورزم ، ساری دنیا میں منفرد کالاش کلچر ، معدنیات شامل ہیں، سے پورا پورا فائدہ اٹھانے کے لئے یونیورسٹی کا قیام ناگزیر تھا ۔ انہوں نے کہاکہ جہاں یونیورسٹی قائم ہو، وہاں نالج اکانومی ہوتی ہے اور کسی ملک کی ترقی کے لئے بنیادی ضرورت ہے جس کا اندازہ اس بات سے لگائی جاسکتی ہے کہ آج سے 45سال پہلے پاکستان کی یونیورسٹیاں ملائشیاء اور سنگاپور سے کہیں آگے تھیں لیکن آج صرف سنگاپور یونیورسٹی کا سالانہ بجٹ پاکستان کی قومی بجٹ کے حجم سے ذیادہ ہے اور اس وجہ سے سنگاپور میں سالانہ فی کس آمدنی 15ہزار ڈالر سے ذیادہ ہے۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ چترال یونیورسٹی یہاں کی پسماندگی اور غربت کا خاتمہ اور ترقی کی نئی دور کے آغاز کا سبب ہوگا اور اس کا قیام پی ٹی آئی حکومت کی طرف سے چترال کے عوام پر کوئی احسان نہیں بلکہ ان کا حق دے کر اپنی فرض پوری کردی ہے۔عمران خان نے یونیورسٹی کے پراجیکٹ ڈایرکٹر کے مطالبے پر یونیورسٹی کی تعمیر کے لئے چار سو کنال اراضی خریدنے کے لئے فنڈز کی فراہمی سمیت سین لشٹ کے علاقے میں محکمہ زراعت کے دو اداروں کو یونیورسٹی کے حوالے کرنے کے لئے موقع پر موجود وزیر اعلیٰ کو ہدایت کردی۔ اس سے قبل چترال یونیورسٹی کے پراجیکٹ ڈایرکٹر پرفیسر ڈاکٹر بادشاہ منیر بخاری نے یونیورسٹی کے بارے میں بریفنگ دی۔

وزیر اعلیٰ کے مشیر برائے اعلیٰ تعلیم مشتاق احمد غنی نے خطاب کرتے ہوئے اعلیٰ تعلیم کے حوالے سے پی ٹی آئی حکومت کی کارکردگی بیان کرتے ہوئے کہاکہ اس دور میں نو یونیورسٹیوں کا اضافہ کردیا۔اس موقع پر پی ٹی آئی کے سیکرٹری جنرل جہانگیر ترین، ایم پی اے بی بی فوزیہ ، ضلع ناظم مغفرت شاہ، ممبران صوبائی اسمبلی سید سردار حسین شاہ، سلیم خان اور صوبائی وزیر محمود خان بھی موجود تھے۔

Facebook Comments

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے