شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / کھوار زبان کی پہلی صاحب دیوان شاعرہ کی کتاب کی تقریب رونمائی

کھوار زبان کی پہلی صاحب دیوان شاعرہ کی کتاب کی تقریب رونمائی

  چترال (نمائندہ چترال آفیئرز) آج بروز منگل سہ پہر 3 تین بجے چترال ڈسٹرکٹ کونسل ہال میں ایک پروقار تقریب کا اہتمام کیا گیا تھا۔تقریب کا انعقاد میئر نامی تنظیم نے کی تھی۔جو کہ کھوار زبان و ادب کے لیے کئی سالوں سے خدمات انجام دے رہی ہے۔یہ تقریب کھوار زبان کی پہلی صاحب دیوان شاعرہ محترمہ فریدہ سلطانہ فری کی کھوار شاعری کی کتاب ”ژانو دشمان“ کی تقریب رونمائی کے حوالے سے رکھی گئی تھی۔ فریدہ سلطانہ فری چترال بکر آباد کی رہائشی ہے۔پچپن ہی سے اردو زبان و ادب میں دلچسپی رہی جو کہ بعد میں جاکر کھوار زبان میں منتقل ہوگئی۔یاد رہے کہ فریدہ فری صاحبہ کھوار زبان کی پہلی صاحب دیوان شاعرہ ہے۔ تقریب رونمائی میں مہمان خصوصی ڈسٹرکٹ ناظم حاجی مغفرت شاہ ،تقریب کے صدر کھوار کے معروف شاعر جناب امیر خان میراور دیگر مہمانوں میں ڈاکٹر عنایت اللہ فیضی،تحصیل ناظم مولانا الیاس اوردوسرے نام شامل تھے۔ تقریب میں شریک مہمانون نے شرکاء سے کتاب کے حوالے سے اظہار خیال کیا اور شاعرہ کو کتاب کی تکمیل اور رونمائی پر مبادک باد پیش کیا اس موقعے پر فردہ سلطانہ فری صاحبہ کو کھوار شاعری کی پروین شاکر کا خطاب بھی دیا گیا۔تقریب میں شریک دیگر شرکاء نے بھی اظہار خیا ل کیاجن میں حاجی مغفرت شاہ، مولانا الیاس ،امین الرحمٰن چغتائی ،پروفیسر ظہور الحق دانش ، اسراد الدین خسرو شامل تھے۔ تحصیل ناظم جناب مولانا الیاس صاحب جو کہ دینی جماعت سے تعلق رکھتے ہیں تحصیل ناظم نے کھوار کی پہلی صاحب دیوان شاعرہ کی حوصلہ افزائی کے لیے 25 ہزار روپےکا اعلان کیا۔ تقریب کے آخر میں فریدہ سلطانہ فری صاحبہ نے کتاب کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہاکہ کتاب کی تیاری کے مراحل میں کسی بھی تنظیم نے میرےساتھ تعاون نہیں کیا۔سوائے  میئراورگندھارا ہندکواکیڈمی کے جنہوں نے میری کھوار شاعری کے مجموعے کو کتابی صورت میں بدلنے میں میری پھرپور مدد کی میں ان کی شکر گزار ہوں۔اور کہا کہ اس حوالے سے آپ سب کی حوصلہ افزائی کی ضرورت ہے تاکہ چترال کی دوسری قابل اور ہونہاربیٹیاں بھی آگے آئیں ۔

Facebook Comments

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے