شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / بیت المقدس کو اسرائیلی دارلخلافہ بنانے کے خلاف جے آئی چترال کا احتجاجی جلسے اور ریلی کا انعقاد

بیت المقدس کو اسرائیلی دارلخلافہ بنانے کے خلاف جے آئی چترال کا احتجاجی جلسے اور ریلی کا انعقاد

چترال(بشیر حسین آزاد)بیت المقدس کو اسرائیلی دارلخلافہ بنانے کے خلاف چترال میں جماعت اسلامی ضلع چترال کے زیر اہتمام ایک احتجاجی جلسے اور ریلی کا انعقاد کیا گیا۔
جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے اقوام متحدہ کے قوانین پر عملدرآمد پر زور دیا جس کے تحت1928کے بعدمفتوحہ علاقے کا تصور ختم کردیا گیا ہے اورفلسطین ایک جابرانہ قبضے کی وجہ سے ایک مقبوضہ علاقہ قرار پایا ہے۔اُنہوں نے امریکہ کی طر ف سے بیت المقد س کو اسرائیل کو دینے اور وہاں اسرائیلی سفارت خانے کے قیام کو بین الاقومی قانون کے خلاف ورزی قراردیتے ہوئے اوربیت لمقدس کو مسلمانوں کے حقیقی دل کی دھڑکن گردانتے ہوئے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور امریکہ کے خلاف شدیدنعرہ بازی کی۔مقررین نے قراداد کے ذریعے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا کہ جلد از جلد امریکی سفارت خانے کو بندکرکے امریکہ سفیر کو حکومت بدر کیا جائے۔اُنہوں اس عزم کا اظہار کیا کہ جماعت اسلامی ملک میں اُس وقت تک احتجاجی مظاہرے کا سلسلہ جاری رکھے گی جب تک ڈونلڈ ٹرمپ اپنا بیان واپس نہیں لیتے۔اُنہوں نے گذشتہ روز شوشل میڈیا میں ایم پی اے سلیم خان کی طرف سے متنازعہ الفاظ کے استعمال پرجس سے اہل سنت والجماعت کے عقائد پر ایک شدید ضرب تصور کرتے ہوئے بھی شدید برہمی کا اظہارکیا صوبائی حکومت سے فوری طورپر اُس کی رکنیت ختم کرنے کا پُرزور مطالبہ کیا۔مقررین نے شوشل میڈیا اور بینروں کے ذریعے مبینہ گستاخانہ الفاظ کے مرتکب ہونے والوں کے خلاف انتظامیہ کی طرف سے قرار واقعی سزا دینے کی یقین دہانی پرعمل درآمدکے ثبوت کے طورپر اُن کے خلاف جلد از جلد ایف آئی آر درج کرنے کا بھی پُرزور مطالبہ کیا۔جلسے سے امیر جماعت اسلامی ضلع چترال مولانا جمشید احمد،نائب امیر ضلع چترال مولانا سلامت اللہ،امیر ختم نبوت مولانا اسرارالدین الہلال،تحصیل امیر عتیق الرحمن،جنرل سیکرٹری جماعت اسلامی معراج الدین نے خطاب کیا۔

Facebook Comments