شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / ڈسٹرکٹ کپ کرکٹ ٹورنامنٹ کا فائنل میچ میں ایوبیہ کرکٹ کلب نے یونیورسٹی ٹاؤن کرکٹ کلب کو ہراکر چیمپین کپ کے فاتح قرار پائے

ڈسٹرکٹ کپ کرکٹ ٹورنامنٹ کا فائنل میچ میں ایوبیہ کرکٹ کلب نے یونیورسٹی ٹاؤن کرکٹ کلب کو ہراکر چیمپین کپ کے فاتح قرار پائے

چترال(نمائندہ چترال ) ڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن چترال کے زیر اہتمام ڈسٹرکٹ کپ کرکٹ ٹورنامنٹ کا فائنل میچ میں ایوبیہ کرکٹ کلب نے یونیورسٹی ٹاؤن کرکٹ کلب کو ہراکر چیمپین کپ کے فاتح قرار پائے جس نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کرتے ہوئے 130رنز کی ٹارگٹ دے دی جس کے جواب میں رنر اپ ٹیم نے تمام کھلاڑیوں کے آوٹ ہونے پر صرف 101رنز بناسکی۔ گورنمنٹ ہائی سکول ایون کے گراونڈ میں کھیلی گئی اس فائنل میچ کے مہمان خصوصی ضلع ناظم چترال مغفرت شاہ تھے جس نے فاتح ٹیم کو کپ اور کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے۔ ایوبیہ ٹیم کی کامیابی میں سہیل کے 45رنزکا حصہ تھا جسے میچ آف دی میچ کا انعام بھی قرار دیا گیاجبکہ نر اپ ٹیم کی بیٹنگ لائن نے کمزور ی کا مظاہرہ کیا جس کے بیٹسمن ایک کے بعد دوسرے آوٹ ہوتے رہے۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں ضلع ناظم مغفرت شاہ نے کہاکہ صوبائی حکومت کی طرف سے ترقیاتی فنڈز کی عدم دستیابی کے باوجود ضلعی حکومت نے کھیلوں کی سرپرستی میں کوئی کسر نہیں چھوڑی کیونکہ یہ ایک مسلمہ حقیقت ہے کہ جہاں کھیلوں کے میدان آباد ہوتے ہیں وہاں نوجوان نسل میں برائی اور منشیات کی لغنت پروان نہیں چڑھتے ۔ا نہوں نے کہاکہ اب تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیل بھی ترقی کے زینے ثابت ہوتے ہیں اور چترال میں اللہ تعالیٰ نے نوجوانوں میں کسی صلاحیت سے محروم نہیں رکھا اور ان میں یہ ٹیلنٹ موجود ہے کہ ان کی رہنمائی کرنے اور انہیں مواقع فراہم کرنے پر وہ قومی ٹیم کا حصہ بن سکتے ہیں۔ضلع ناظم نے اس موقع پر موجود ڈسٹرکٹ اسپورٹس افیسر کو ہدایات جاری کردی کہ وہ اس گراونڈ کے جملہ مسائل حل کرنے کے لئے ٹیکنیکل تجاویز ان کو تحریری صورت میں پیش کردیں۔اس سے قبل گورنمنٹ ہائی سکول ایون کی طرف سے ظفر نے گراونڈ سے متعلق مسائل بیان کئے جن میں گراونڈ تک رسائی کے لئے پیدل اور جیپ ایبل سڑک کی تعمیر، سیلاب سے اسے بچاؤ کے لئے حفاظتی پشتہ ، پینے کے پانی کی فراہمی اور گراونڈ کو ہموار بنانے کا ذکرکیا۔ ڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن کے صدر محمد ایاز نے کہاکہ کرکٹ ایسوسی ایشن کے قیام کے بعد اسے سرکاری سرپرستی نہیں ملی اور دوسری طرف ان کے خلاف سازشوں کابھی جال بچھاکر اسے کام کرنے سے روکنے کی کوشش کی گئی لیکن انہوں نے اپنی جدوجہد جاری رکھی اور پاکستان کرکٹ بورڈ کی طرف سے ضلع چترال کو کرکٹ کی تنظیم کے لحاظ سے ضلعے کا درجہ قرار دلوانے کے لئے کسی دقیقہ فروگزاشت نہیں کیا ۔ا نہوں نے کہاکہ چترال کو پی سی بی سے کرکٹ کا ضلع قرار دلوانے کا مرحلہ بہت قریب ہے اور کرکٹ کے شائقین کو بہت جلد خوشخبری مل جائے گی۔ انہوں نے کہاکہ اب تک پی سی بی نے چترال کے ساتھ سوتیلی ماں کا سلوک جاری رکھا لیکن اب چترال کو بھی اس کی حیثیت دی جارہی ہے۔ ڈسٹرکٹ اسپورٹس افیسر عبدالرحمت نے کہاکہ ایسوسی ایشن کھلاڑیوں کا نمائندہ تنظیم ہے اور اسے جب تک قواعد وضوابط کے مطابق چلایا گیا تو اس کے خلاف کوئی سازش کامیاب نہیں ہوسکتا اور موجود ہ صدر نے ایسوسی ایشن کے لئے جو خدمات انجام دے رہے ہیں ، وہ کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہیں۔

Facebook Comments