شہ سرخیاں
Home / تازہ ترین / سات سالہ بچے کے ساتھ مبینہ بدفعلی کے جرم میں سرکاری سکول کا چوکیدار گرفتار

سات سالہ بچے کے ساتھ مبینہ بدفعلی کے جرم میں سرکاری سکول کا چوکیدار گرفتار

چترال (نمائندہ چترال آفیئرز) گورنمنٹ سینٹنل ماڈل ہائی سکول چترال کے چوکیدار کو سات سالہ بچے کے ساتھ مبینہ بد فعلی کرنے کے جرم میں گرفتار کرلیا گیا۔بچے کے رشتہ داروں (افغان باشندے) نے بتایاکہ اتوار کے روز وہ سکول کے قریب روڈ میں بیٹھ کر کام کررہے تھے کہ انہیں معلوم ہوا کہ ان کے بچے کو سکول کے اندر بند کرلیا گیا ہے جس پر وہ دیوار پھلانگ کر اند جاکر دیکھا تو ملزم بدفعلی کی کوشش کررہا تھا اور انہیں دیکھ کر وہ بھاگ نکلے۔ انہوں نے بتایاکہ ان کی رپورٹ پر چترال پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا ہے۔ چترال تھانے کے محرر نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہاکہ انہوں نے متاثر بچہ (ف) کے بیان پر ملزم نظار شاہد ولد محمد ولی خان (عمر 32سال) ساکن ژانگ بازار کے خلاف تعزیرات پاکستان کے دفعہ 377اور چائلڈ پروٹیکشن ایکٹ کے دفعات 53اور 55کے تحت مقدمہ دائر کرکے ملزم کو گرفتار کرلیا ہے۔ ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے ڈی ایم ایس ڈاکٹر اسرا رالدین نے بتایاکہ متاثرہ بچہ اور ملزم کا طبی معائنہ کیا گیا ہے جبکہ رپورٹ ابھی فائنل نہیں ہوئی۔

Facebook Comments