شہ سرخیاں
Home / شمس الرحمن تاجکؔ

شمس الرحمن تاجکؔ

ٹیسٹنگ ایجنسیز کا دھندہ

اُس دور میں جب سب کچھ بکاؤ تھا، ایمان داری کے پیمانے اور تبدیلی کے نعروں کا وجود نہیں ہوا کرتا تھا۔ سرکاری اداروں میں رشوت لینے کے کچھ رائج الوقت اصول ہوا کرتے تھے۔ بے ایمانوں کے اس دور میں کسی پوزیشن کے لئے آپ رشوت کی رقم لے ...

تفصیل

اختتام یا منزل

یہ ضروری نہیں کہ ہر اختتام منزل ہی ہو بہت سارے اختتام، خاتمے کا باعث بن جاتے ہیں۔منزل کے بعدسفر تمام ہوتا ہے۔اختتام کے بعدنئے جہاں کا نیا سفر۔ اس جہاں سے تو آپ گزر ہی جاتے ہیں۔ نئے جہاں میں نئے لوگ، نئی رشتہ داریاں، نئے ہمسائے، نئے الزام، ...

تفصیل

کرکٹ، دین اور بدنامی

جنید جمشید ایک کامیاب ترین گلوکار تھے اپنے عروج کے زمانے میں انہوں نے گلوکاری کو خیرآباد کہا اور اسلام کی سربلندی کے لئے زندگی وقف کردی۔ وہ جب گلوکار تھے تب بھی کمال کے تھے، جب مبلغ بنے تب بھی عروج کا لفظ ان کے نام کے ساتھ لگا ...

تفصیل

حرام مرغی اور حلال رشوت

ڈسٹرکٹ انتظامیہ کچھ دن پہلے ایک نوٹی فیکشن جاری کرچکی ہے گوشت کی قیمتوں کے سلسلے میں، اس میں واضح طور پر یہ حکم دیا گیا ہے کہ ہم نے ایک کاغذ کا ٹکڑا برسر بازار ریٹ لسٹ کے نام پر لگا دیا اب عوام اور کاروباری حضرات خاص طور ...

تفصیل

میرٹ گئی تیل لینے

ہم بحیثیت قوم قحط الرجال کے اس دور سے گزر رہے ہیں کہ کچھ بھی کرو، کسی کو بھی منتخب کرو، کسی پر بھی بھروسہ کرو، نتیجہ صفر ہی نکلتا ہے۔ ہمارے نمائندے خصوصاً چترال کے منتخب نمائندے اکیسویں صدی میں 1033ء کے دورانیے کی سیاست کررہے ہیں۔ ان کو ...

تفصیل

مذاق کس نے شروع کیا

عام آدمی کو احتساب تماشا کیوں لگتا ہے؟ اس کی وجہ وہی پرانی تھیوری ہے۔ نبی آخرالزمان ﷺ فرماتے ہیں کہ اگر میری بیٹی فاطمہ بھی چوری کرے تو میں ان کا بھی ہاتھ کاٹنے میں دیر نہیں کروں گا” یہ ہوتی ہے احتساب، قانون کی بالادستی یا جو کچھ ...

تفصیل

یا سال پرانی منافقت

ہم بطور معاشرہ سچ سہنے کی ہمت کھو چکے ہیں۔ سچ کا سامنا کرنے، حالات کا مقابلہ کرنے، اپنے زمانے کے تقاضوں اور علوم کے حصول اور ایک صحت مند مقابلے کے بجائے ہمارا سارا زور اس بات پر رہتا ہے کہ جو کچھ میں نے بولا ہے وہی سچ ...

تفصیل

آلو ، ٹیکس اور سیاست

کسی ملک کے نظام کو چلانے کے لئے انتظامیہ ووٹوں سے منتخب ہو کر آئے یا پھر امتحان پاس کرکے، دونوں کو پیسہ چاہئے۔ اور پیسہ حکومتیں مختلف مد میں ٹیکس لگا کر جمع کرتی ہیں۔ ٹیکس کا نظام کوئی نیا نہیں ہے جب سے دنیا بنی ہے حکومتوں کا ...

تفصیل

بھونکتا ادیب اور جشن قاق لشٹ

ہماری ایک مقامی ادیب سے دوستی ہے کچھ دن پہلے ان کے ہاں جانے کا اتفاق ہوا۔ ان کے چھ سال کے بیٹے سے پوچھا۔ بیٹا ادیب کیسے ہوتے ہیں۔ فوراً جواب آیا کہ ’’جن کے جوتوں کے تلوے پھٹے ہوئے ہوں وہ ادیب ہوتے ہیں‘‘۔ جواب حیرت انگیز تھاگومگو ...

تفصیل

پی ٹی آئی، عوام اور قدرت

کچھ باتیں آپس میں گڈ مڈ ہوگئی ہیں۔ پہلی بات پی ٹی آئی اب سیاسی طور پر بالغ ہوگئی ہے۔ بالغ سے مراد آپ جو بھی لیں ہم پاکستان میں رہتے ہوئے سیاسی بلوغت اس سطح کو کہتے ہیں جہاں ایک سیاسی بندہ یا سیاسی پارٹی صحیح یا غلط جوڑ ...

تفصیل